Welcome

Welcome to official website of PRES

شمسی توانائی سے بجلی تیار کرنیکا منصوبہ تیار

شمسی توانائی سے بجلی حاصل کرنے کا منصوبہ تیار کرلیا گیا ہے جس کے تحت پاکستان انجینئرنگ کونسل نے اسلام آباد میں چھ اہم مقامات پر شمسی توانائی پیدا کرنے والے پینل لگائے ہیں۔ ان پینلز پر کل ۵۱ لاکھ روپے کا خرچا ہوا ہے جبکہ تین کلوواٹ بجلی پیدا ہو سکے گی۔ اس بات کو پاکستان انجینئرنگ کونسل کی چیئرپرسن انجینئر رخسانہ زبیری نے ایک ٹی وی پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے بتایا۔ انہوں نے بتایا کہ ان پینلز کے ذریعے سپریم کورٹ کے اہم دفاتر کو چوبیس گھنٹے بجلی فراہمی ہو گی۔ رخسانہ زبیری نے بتایا کہ شمسی توانائی کوئی نئی ٹیکنولوجی نہیں،پہلے یہ مہنگی تھی مگر اب اس کی لاگت خاصی کم ہو گئی ہے اور ہم اس کے ذریعے لوڈشیڈنگ سے جان چھڑا سکتے ہیں۔ شمسی توانائی کا سسٹم ہر گھر کی چھت پر نصب کر کے تمام لوگوں کی گھریلو ضروریات کو پورا کیا جا سکتا ہے اور پھر واپڈا اورکے ای ایس سی صرف متبادل کے طور پر استعمال ہوں گے، اس سلسلے میںلوگوں کو آگاہی دینے کی ضرورت ہے۔ دنیا کے بڑے ترقی یافتہ ممالک اپنی توانائی کا ایک بڑا حصہ شمسی توانائی سے حاصل کرتے ہیں۔ پلاننگ کمیشن آف پاکستان کے پارکنگ ایریا میں بھی شمسی توانائی کے پینل لگائے جائیں گے۔تقریباً۵۵اہم جگہوں پر شمسی توانائی کو نصب کیا جارہا ہے۔ ا

Comments are closed.